Buzarg Ki Nasihat 22

خلیفہ ہارون رشید کو ایک بزرگ کی نصیحت

ایک دن ابن سماک رحمت اللہ علیہ ہارون رشید کے پاس گئے خلیفہ کو پیاس لگی ….. پانی مانگا اور پانی پینے کو تھا کہ ابن سماک نے کہا :امیر المومنین ذرا ٹھر جا یۓ، پہلے یہ بتا یۓ کہ اگر پانی آپکو نہ ملے تو شدت پیاس میں اپ ایک پیالہ پانی کا کس قیمت تک خرید سکے گے ہارون رشید نے کہا نصف سلطنت دیکر لے لونگا …..
ابن اسماک نے کہا : اب پی لیجۓ…. جب وہ پانی پی چکا تو پھر کہا :اگر یہ پانی اپ کے پیٹ میں رہ جا یۓ اور نا نکلے تو اس کے نکلنے کے غوض اپ کیا خرچ کرینگے …. کلیفہ نے کہا باقی تمام سلطنت بھی دے دونگا ….
ابن اسماک نے کہا :بس یہ سمجھ لیجۓ کہ اپکا تمام ملک ایک گھونٹ پانی اور چند قطرے پیشاب کی قیمت رکھتا ہے پس اس پر کبھی تکبر نہ کیجۓ اور جہاں تک ھو سکے لوگوں سے نیک سلوک کیجۓ…. تاریخ الخلفاء میں لکھا ہے کہ ہارون رشید پر اس بات کا بڑا اثر ہوا اور دیر تک روتا رہا ….

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں