24

انسان غلطی کا پتلا ہے -ایک زاہد اور متقی عالم کے بارے میں ایک زبردست واقعہ –

کہتے ہیں ایک عالم تھا -وہ بہت متقی اور پرہیزگار تھا –
ایک دن اس نے ایک چوہے کو مارڈالا اور اس کو اچھی طرح مختلف چیزوں میں لپیٹ کر اپنے ساتھ سنبھال کے رکھ دیا –

بہت عرصہ گزر گیا – ایک دن وہ اپنے دوسرے عالم دوستوں کے ساتھ محفل میں بیٹھا تھا – یومے اخرت کے بارے میں باتیں ہو رہی تھی –
تو اس نے اپنی جیب سے وہ محفوظ شدہ چوہا نکالا ور کہا کہ میں اس لیے اس کو ہمیشہ اپنے پاس رکھتا ہوں –
جب روزے قیامت الله تعالی کے روبرو پیش ہونگا – تو الله تعالی سے کہوں گا کہ اسنے ساری عمر تیری عبادت کی ہے اور اپنی زندگی میں کبھی کوئی گناہ نہیں کی سواے اس کے کہ اس چوہے کو ہلاک کیا ہے – اس لیے اس کو جنت بھیج دیا جائے –

t>

پاس ہی بیٹھے ایک دوسرے عالم دوست نے اس وقت اس کے کیے گۓ عبادات پر پانی پھیردیا- جب اس نے کہا کہ یہ ایک ناپاک چیز ہے جس کو تم نے اپنے پاس رکھا ہے -جس سے تمہاری کوئی عبادت قبول نہیں ہوگی –

اس واقعے سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ انسان غلطی کہ پتلا ہے -کبھی بھی اپنے اغمال کو بیان یا اس پر نازاں نہیں ہونا چاہیے نہ ہم الله تعالی کی نغمتوں کا صلا عبادات کی صورت میں پورا کر سکتے ہیں – بلکہ وہ ہمیں اپنی خاص رحمت و فضل کے ذریعہ جنت بھیجے گا –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں